Breaking News

مدرسہ اہلسنت فیضان غریب نواز لدہے کا پار میں جشن میلادالنبی صلی الله تعالى عليه وسلم بحسن وخوبی اختتام پزیر… رپورٹر:۔برھان الدین قادری انواری خادم مدرسہ فیضان غریب نواز

ہر سال کی طرح امسال بھی ۱۱ ربیع الاول ۱۴۴۴ھ مطابق ۸ اکتوبر ۲۰۲۲ء بروز یک شنبہ دارالعلوم انوارمصطفیٰ سہلاؤشریف کی تعلیمی شاخ مدرسہ اہل سنت فیضان  غریب نواز لدہے کا پار،تحصیل رامسر ضلع باڑمیر میں جشن عید میلاد النبی صلی اللہ تعالی علیہ وسلم بڑی عقیدت و محبت اور ادب واحترام کے ساتھ "غلامان اھل بیت کمیٹی”کے زیر اہتمام منایا گیا-

اوّلاً اجتماعی قرآن خوان خوانی ہوئی جس میں فیضان غریب نوازکے سبھی طلبہ وطالبات اور قریہ کے نو جوانوں نے شرکت کی!
پھر مدرسہ فیضان غریب نواز کے وسیع وعریض میدان میں "مولود النبی صلی اللہ تعالی علیہ وسلم” کے سلسلے میں ایک مجلس سعید منعقد کی گئی،جس کی شروعات تلاوت کلام اللّٰہ سے کی گئی-تلاوت قرآن پاک کرنے کے لئے دارالعلوم انوار مصطفی کے ایک متعلم قاری عبد الشکور صاحب انواری کو مدعو کیا گیا، بعدہ یکے بعد دیگرے دارالعلوم انوارمصطفیٰ و مدرسہ فیضان غریب نواز کے کئی طلبہ نے نعت رسول مقبول صلّی اللّٰہ علیہ وسلّم سندھی و اردو زبان میں پیش کیں ، اور ساتھ ہی ساتھ کچھ طلبہ نے آمد سرکار۔و سیرت النبی صلی الله تعالی علیہ وسلم پر مشتمل تقریریں بھی کیں!
آخرمیں استاذ محترم حضرت علامہ خیر محمد صاحب قادری انواری مدرس مادر علمی دارالعلوم انوار مصطفیٰ سہلاؤ شريف نے "ولادت نبوی کے پاکیزہ حالات وواقعات” کے عنوان پر مختصر مگر جامع و خصوصی خطاب کیا۔

نظامت کے فرائض حضرت قاری نظام الدین صاحب انواری۔ نے بحسن وخوبی نبھائی-

اس پروگرام میں خصوصیت کے ساتھ یہ حضرات شریک ہوئے-حضرت مولانا محمد اسماعیل صاحب قادری
حضرت مولانا برکت علی صاحب انواری ،حضرت مولانا شیر محمد صاحب انواری خطیب وامام جامع مسجد سجن کا پار ،حضرت قاری اسلام الدین قادری امام جامع مسجد جمانیوں کی ڈھانی ، الحاج محمد حیات صاحب محمد کاپار، حضرت مولانا جمال الدین صاحب قادری انواری، وغیرہم-بعدہ صلاة و سلام و حضرت مولانا محمد اسماعیل صاحب قادری کی دعا پر یہ مجلس سعید اختتام پزیر ہوئی-

رپورٹر:۔برھان الدین قادری انواری
خادم مدرسہ فیضان غریب نواز۔لدھے کا پار۔تحصیل:رامسر۔ باڑمیر (راجستھان)

About محمد شاہد رضا برکاتی

Check Also

جسٹس شری کرشنا کا بیان قابل غور و فکر.. ازقلم : محمد علاؤالدین قادری رضوی ثنائی صدرافتا: محکمہ شرعیہ سنی دارالافتاء والقضاء میراروڈ ممبئی

کسی بھی جمہوری ملک کی جمہوریت کی بقا عدالتی فیصلے پر منحصر ہے ، داخلی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے